کپاس کی فی ایکڑ پیداوار گزشتہ 10 سال کی کم ترین سطح پر آگئی

کراچی(این این آئی)پاکستان میں کپاس کی فی ایکڑ پیداوار میں کمی کا رجحان دیکھنے میں ہے۔ فی ایکڑ پیداوار 10 سال کی کم ترین سطح پر ریکارڈ کی گئی ہے ۔آل پاکستان ٹیکسٹائل ملز ایسوسی ایشن (اپٹما)کے مطابق کپاس کی فی ایکڑ پیداوار51 فیصد تک گرگئی ہے جو کہ 10 سال کی کم ترینسطح ہے۔ واضح رہے، دنیا بھر میں کپاس کی فی ایکڑ پیداوار میں اضافہ ہورہا ہے، برازیل میں فی ایکڑ پیداوار 1660 کلو پہنچ چکی ہے، ازبکستان میں 1200 کلو، ترکی 1597 کلو اور امریکا میں 1018 کلو فی ایکڑ پیداوار ہورہی ہے۔ داوار 625 کلو تک

آگئی ہے جو کہ 2012 میں فی ایکڑ 880 کلو تھی۔اس کے برعکس پاکستان میں ریسرچ ڈیویلپمنٹ نہ ہونے کے سبب کپاس کے بیج کا معیار خراب ہورہا ہے۔ ملک کی ضرورت پوری کرنے کے لیے درآمدی کاٹن پر انحصار کرنا پڑتا ہے۔ زرعی ملک ہونے کے باجود کپاس کی پیداور کم ہورہی ہے جس کے باعث ٹیکسٹائل انڈسٹری کو خام مال میں کمی کا سامنا ہے۔معاشی ماہرین کے مطابق کپاس کی پیداوار میں کمی معیشت کے لیے خطرے کی علامت ہے۔ اس کا تدارک ہنگامی بنیادوں پر کیا جائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں