محکمہ ایکسائز کا جدید سسٹم شہریوں کو خوار کرنے لگا

مکوآنہ (این این آئی ) محکمہ ایکسائز کا سسٹم کو جدید تقاضوں کے مطابق ڈھالنا شہریوں کو مہنگا پڑگیا، کاغذات کی سکیننگ کا کنٹریکٹ ختم ہونے کی وجہ سے گاڑیوں، موٹرسائیکلوں کی ہزاروں فائلز ایکسائز دفاتر میں جمع ہوگئیں، شہری خوار ہوگئے۔محکمہ ایکسائز فوری فیس وصولی کے باوجود شہریوں کو بروقت سمارٹ کارڈ اور پلیٹس دے پا رہا ہے، اور نہ ہی رجسٹریشن کے بعد شہریوں کے گھر فائلز بھجوائی جارہی ہیں۔ گزشتہ کئی روز سے دفتری ریکارڈ کیلئے کاغذات کی سکینگ کا عمل رکنے سے نمبر جاری ہونے کے باجود رجسٹریشن کا عمل مکمل نہیں ہوپا رہا ہے۔ رجسٹریشن

کا عمل مکمل نہ ہونے سے گاڑی اور مالک کا ڈیٹا نمبر پلیٹس کمپنی اور سمارٹ کارڈ بنانیوالی کمپنیوں کونہیں بھجوایا جاسکتا، شہریوں کو فیس کی وصولی کیبعد چالان پیپرتو جاری کیا جارہا ہے، لیکن فائل، سمارٹ کارڈ اورنمبر پلیٹس کا اجرا نہیں کیا جارہا ہے، سکینگ کیلئے اب پرائیویٹ کمپنیوں کوٹینڈردینے کی بجائے محکمہ نے خودسکینگ کے لئے آلات خریدنے کا فیصلہ کیا ہے، محکمہ کو سکینگ کا عمل شروع کرنے میں 2 سے 3ماہ لگ سکتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں